:: الوقت ::

ہمارا انتخاب

خبر

زیادہ دیکھی جانے والی خبریں

ڈاکومینٹس

صیہونی حکومت

صیہونی حکومت

صیہونی حکومت اپنے زوال کے سفر پر تیزی سے رواں دواں ہے اور ہرآنے والا دن اس غاصب اور غیر قانونی حکومت کو سیاسی تنہائیوں کی طرف دھکیل رہا ہے
اسلامی تحریکیں

اسلامی تحریکیں

ماضی اور حال کی اسلامی تحریکوں کا اگر گہرائی سے جائزہ لیا جائے تو یہ بات واضح ہوتی ہے کہ جہاں قیادت بابصیرت اور اپنے اھداف میں مخلص تھی وہاں کامیابیاں نصیب ہوئیں اور قربانیاں رنگ لائیں اور جہاں قیادت ۔۔
وهابیت

وهابیت

برطانوی سامراج کا لگایا یہ درخت ایک شجر سایہ دار میں تبدیل ہوکر طالبان،داعش،النصرہ۔الشباب اور بوکوحرام کی صورت میں اسلام اور مسلمانوں کو کھوکھلا کرنے میں پیش پیش ہے ۔
طالبان

طالبان

اسلام اور افغانستان کی آذادی کے نام پر وجود میں آنے والا یہ گروہ پاکستان اور افغانستان کے لئے ایک ایسے ناسور میں بدل گیا ہے جو نہ صرف اسلام کو بدنام کرنے میں پیش پیش ہے بلکہ اس کے وجود سے خطے کی اسلامی قوتوں کو بھی شدید نقصان
استقامتی محاز

استقامتی محاز

حزب اللہ کے جانثاروں نے اپنی لہو رنگ جد و جہد سے غاصب صیہونی حکومت کو ایسی شکست دی ہے جس سے خطے میں طاقت کا توازن مکمل طور پر تبدیل ہوتا نظر آرہا ہے اور استقامتی اور مقاومتی محاز
یمن

یمن

یمن کیجمہوری تحریک نے آل سعود سمیت خطوں کی دیگر بادشاہتوں کو نئے چیلنجوں سے دوچار کردیا ہے۔سعودی جارحیت آل سعود کے لئے ایک دلدل ثابت ہوگی۔
پاکستان

پاکستان

امریکی مداخلتوں کا شکار یہ ملک آج اس مرحلہ پر پہنچ گیا ہے کہ امریکہ کے علاوہ خطے کے بعض عرب ممالک بھی اسے اپنا مطیع و فرماندار بنانا چاہتے ہیں
داعش

داعش

سی آئی اے اور موساد کی مشترکہ کوششوں سے لگایا گیا یہ پودا جسے آل سعود کے خزانوں سے پالا پوساگیا اب عالم اسلام کے ساتھ ساتھ اپنے بنانے والوں کے لئے بھی خطرہ۔۔۔۔
alwaght.com
خبر

برطانیہ، تھریسا مے وزارت عظمی کی ذمہ داری سنبھالنے کو تیار

Tuesday 12 July 2016
برطانیہ، تھریسا مے وزارت عظمی کی ذمہ داری سنبھالنے کو تیار

الوقت - برطانیہ کے وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون بدھ تک برطانوی وزارت عظمی کا عہدہ چھوڑ دیں گے۔

برطانیہ کی تاریخ میں سب سے زیادہ وقت تک وزیر داخلہ رہنے والوں میں سے ایک تھریسا مے کو حکمراں كنزرویٹو پارٹی کا نیا لیڈر منتخب کیا گیا ہے۔

ایسے میں تھریسا  برطانیہ کی اگلی وزیر اعظم بن سکتی ہیں۔ اس بارے میں باضابطہ اعلان ابھی نہیں ہوا ہے لیکن اگر ایسا ہوتا ہے، تو تھریسا  مارگریٹ تھیچر کے بعد برطانیہ کی وزیر اعظم بننے والی دوسری خاتون ہوں گی۔

برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون نے کہا کہ وہ بدھ کو اپنا استعفی ملکہ ایلزبتھ کو پیش کردیں گے اور تھریسامے کو وزیراعظم بنانے کی سفارش کریں گے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے تھریسا مے کو اپنی بھر پور حمایت کا یقین دلایا۔

اس سے پہلے وزیراعظم بننے کی دوڑ میں شامل تمام امیدواروں نے رضاکارانہ طور پر دستبرداری کا اعلان کیا تھا جس کے بعد تھریسا مے ہی واحد امیدوار رہ گئی تھیں۔ 1997  سے ممبر پارلیمنٹ تھریسا  2010 سے برطانیہ کی وزیر داخلہ ہیں۔ انہوں نے برطانیہ کے یورپی یونین میں بنے رہنے کی حمایت کی تھی۔  59 سالہ تھریسا  نے سیاست کی دنیا میں قدم رکھنے سے پہلے بینک آف انگلینڈ میں ملازمت کی ہے۔ تھریسا  کے شوہر فلپ جان مے بھی ایک بینکر ہیں۔ ٹیررزم ایکٹ 2000 کے استعمال اور پاسپورٹ درخواستوں کو نمٹانے جیسے کچھ مسائل کو لے کر وزیر داخلہ کے طور پر تھریسا  تنازعات میں بھی رہیں۔ ڈیوڈ کیمرون نے منگل کو اپنی کابینہ کی میٹنگ کی آخری صدارت کریں گے اور توقع ہے کہ وہ بدھ کو وزیراعظم سے سوال و جواب کے آخری سیشن میں شرکت کے بعد ملکہ کو اپنا استعفیٰ پیش کر دیں ۔

ٹیگ :

برطانیہ ڈیوڈ کیمرون وزارت عظمی

نظریات
نام :
ایمیل آئی ڈی :
* ٹیکس :
سینڈ

Gallery

تصویر

فلم

شیخ عیسی قاسم کی حمایت میں مظاہرے، کیمرے کی نظر سے

شیخ عیسی قاسم کی حمایت میں مظاہرے، کیمرے کی نظر سے